وفاقی کابینہ کی قومی توانائی بچت پلان کی منظوری، ریسٹورنٹس اور مارکیٹس رات 8 بجے بند


وفاقی کابینہ کی قومی توانائی بچت پلان کی منظوری، ریسٹورنٹس اور مارکیٹس رات 8 بجے بند

اسلام آباد (92 نیوز) – وفاقی کابینہ نے قومی توانائی بچت پلان کی منظوری دے دی۔ ریسٹورنٹس اور مارکیٹس رات آٹھ بجے بند ہوں گی۔ 

منگل کو اسلام آباد میں وزیراعظم شہباز شریف کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کے اجلاس کے بعد میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے وزیر دفاع خواجہ محمد آصف نے کہا کہ کابینہ نے قومی توانائی کے تحفظ کے منصوبے کی منظوری دی اور کفایت شعاری کی پالیسی کی بھی منظوری دی۔

وزیر دفاع نے کہا کہ وفاقی حکومت ان کفایت شعاری کے اقدامات پر صوبوں سے بھی مشاورت کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ توانائی کی بچت اور کفایت شعاری ایک قومی مقصد ہے اور ہم اسے اتفاق رائے سے شروع کرنا چاہتے ہیں۔

منصوبے کی وضاحت کرتے ہوئے، وزیر خواجہ آصف نے کہا کہ کابینہ نے تمام ریستوران، ہوٹل اور بازاروں کو رات 8 بجے تک بند کرنے کی منظوری دے دی ہے۔ اسی طرح شادی ہال بھی رات 10 بجے تک بند رہیں گے۔ مزید برآں، بجلی کے پنکھے، بلب اور گیزر بھی تحفظ کو دوستانہ بنائیں گے، جبکہ سڑکوں کی لائٹس متبادل طور پر آن رہیں گی۔

مزید برآں، الیکٹرک بائک کے استعمال کی حوصلہ افزائی کی جائے گی اور حکومت ان کی تیاری کے لیے ایک کمپنی سے بات چیت کر رہی ہے۔

خواجہ آصف نے کہا کہ کفایت شعاری کے ان تمام اقدامات سے حکومت کے اربوں روپے بچانے میں مدد ملے گی۔ انہوں نے کہا کہ وزارت اطلاعات و نشریات ان اقدامات کی افادیت کے حوالے سے عوام میں بیداری پیدا کرنے کے لیے ایک خصوصی مہم بھی چلائے گی۔ ان تمام اقدامات کو ایک دو روز میں صوبوں سے مشاورت کے بعد حتمی شکل دے دی جائے گی۔

انہوں نے کہا کہ کابینہ نے کفایت شعاری کے اقدامات پر عمل درآمد کی اس پالیسی کے اثرات کے بارے میں تفصیلی تبادلہ خیال کیا جو کہ ہماری قومی ثقافت کا حصہ بن جائے گی اور قوم کو موجودہ مالیاتی مسائل سے نجات دلانے میں بھی مدد ملے گی۔

اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے وزیراعظم کے مشیر برائے کشمیر و گلگت بلتستان قمر زمان کائرہ نے کہا کہ کابینہ اجلاس کے دوران وزیراعظم شہباز شریف نے پاکستانی قوم اور کشمیریوں کا مقدمہ دنیا کے سامنے پیش کرنے پر وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری کی کاوشوں کو سراہا۔ حال ہی میں اقوام متحدہ میں اپنی پریس کانفرنس کے دوران پی پی پی کے بانی چیئرمین اور ہمارے آباؤ اجداد کے نقش قدم پر چلتے ہوئے

انہوں نے کہا کہ پاکستانی خود دہشت گردی کا سب سے زیادہ شکار ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم پاکستان اور انسانیت کا مقدمہ نہیں چھوڑیں گے۔

اس موقع پر وزیر اطلاعات و نشریات مریم اورنگزیب بھی موجود تھیں۔



Source link

Leave a Comment

Your email address will not be published.